ہم سے جو کُچھ کہنا ہے وہ بعد میں کہہ

ہم سے جو کُچھ کہنا ہے وہ بعد میں کہہ

اچھی ندیا! آج ذرا آہستہ بہہ

ہَوا! مرے جُوڑے میں پُھول سجاتی جا

دیکھ رہی ہوں اپنے من موہن کی راہ

اُس کی خفگی جاڑے کی نرماتی دُھوپ

پاروسکھی! اس حّدت کو ہنس کھیل کے سہہ

آج تو سچ مچ کے شہزادے آئیں گے

نندیا پیاری! آج نہ کُچھ پریوں کی کہہ

دوپہروں میں جب گہرا سناٹا ہو

شاخوں شاخوں موجِ ہَوا کی صُورت بہہ

0 تبصرہ جات:

Post a Comment